ان 5 عادات کو اپنا کر اپنی زندگی کو بہتر بنائیں (سائنس کے مطابق)

ان 5 عادات کو اپنا کر اپنی زندگی کو بہتر بنائیں (سائنس کے مطابق)

ان 5 عادات کو اپنا کر اپنی زندگی کو بہتر بنائیں (سائنس کے مطابق)

صحت مند عادات ہمارے دماغ اور جسم کو بہتر بنانے میں بہت مدد کرتی ہیں۔ لوگ اپنے اردگرد صحت مند اور فعال لوگوں کی عادات کی پیروی کرنے کی کوشش کرتے ہیں لیکن اصل میں جو چیز انہیں فائدہ پہنچاتی ہے وہ چیزیں ہیں جو دراصل ان کے لیے کام کرتی ہیں۔

تحقیق کے مطابق درج ذیل چند ایسی عادات ہیں جو عام طور پر تمام لوگوں کو فائدہ پہنچاتی ہیں۔ تمام کشیدہ عادات فطری ہیں اور مخصوص شخصیات کے لیے مخصوص کیے بغیر آسانی سے اپنائی جا سکتی ہیں۔

دوڑنا:

محققین کے مطابق دوڑنا انسان کے دماغ اور جسم کے لیے سب سے موثر عادت ہے۔ دوڑنا شکار کے شکار اور خوراک اکٹھا کرنے سے صحت کے مقاصد کے لیے دوڑنا شروع ہوا ہے۔ ماہرین کے مطابق دھیمی رفتار سے بھی پانچ سے دس منٹ تک دوڑنا قلبی اور دیگر امراض کے خطرات کو کم کرنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے۔

وقفے وقفے سے روزہ رکھنا:

وقفے وقفے سے روزہ رکھنا کھانے کا ایک نمونہ ہے جو روزے اور کھانے کے ادوار کے درمیان چکر لگاتا ہے۔ یہ جسم میں آکسیڈیٹیو نقصان کے ساتھ ساتھ سوزش کو کم کرنے کے لیے سمجھا جاتا ہے۔ یہ وزن کم کرنے میں مدد کرتا ہے اور بلڈ پریشر، کولیسٹرول کی سطح اور دل کی بہت سی بیماریوں کے لیے کئی خطرے والے عوامل کو بہتر بناتا ہے۔

وزن اٹھانا:

یہ شاید ہی اس قسم کی ورزش ہو جو ہمارے ذہن میں آتی ہے جب ہم اپنی صحت کو بہتر بنانے کے بارے میں سوچتے ہیں۔ وزن اٹھانا پٹھوں کے بڑے پیمانے کو زیادہ سے زیادہ اور برقرار رکھنے کے لیے اچھا ہے جو کسی شخص کی زندگی میں سالوں کا اضافہ کرنے میں مدد کرتا ہے۔

فیس بک کا زیادہ استعمال نہ کریں:

محققین نے ثابت کیا ہے کہ فیس بک سے دور رہنا لوگوں کو ان کی زندگی سے خوش اور مطمئن رکھنے میں مددگار ہے۔ سوشل میڈیا کو حقیقت کے تصور اور دوسرے لوگوں کی زندگی درحقیقت کیسی دکھتی ہے کو مسخ کرنے کے لیے سمجھا جاتا ہے۔ لوگ اپنا موازنہ دوسروں کے ساتھ کرنے لگتے ہیں اور جب وہ دیکھتے ہیں کہ سب کچھ دوسروں کے ساتھ اچھا ہوتا ہے تو وہ اپنی زندگی کو کم پرجوش محسوس کرتے ہیں۔

فطرت کے ساتھ وقت گزاریں:

ٹیکنالوجی میں ترقی کے ساتھ، انسان گھر کے اندر رہنے کے پابند ہیں۔ ایسا لگتا ہے کہ ڈیجیٹل طاقت نے ہماری زندگیوں کو کنٹرول کیا ہے۔ تاہم، تحقیق بتاتی ہے کہ اگر ہم اپنا وقت فطرت میں گزاریں چاہے وہ جنگلات ہوں، پہاڑ ہوں یا سمندر، ہم زیادہ خوش رہ سکتے ہیں۔ انسانی جسم کو آج کے کیوبیکلز کی نسبت قدرتی جگہوں پر زیادہ ارتقا پذیر سمجھا جاتا ہے۔

نتیجہ:

صحت مند عادات کو اپنانا ہماری ذہنی اور جسمانی صحت کو بہت بہتر بنا سکتا ہے۔ اگرچہ لوگ دوسرے لوگوں کی عادات سے متاثر ہو سکتے ہیں، لیکن یہ سمجھنا ضروری ہے کہ جو چیز ایک شخص کے لیے کام کرتی ہے وہ دوسرے کے لیے کام نہیں کر سکتی۔ پھر بھی، لوگوں کی متنوع صفوں کے لیے فائدہ مند ہونے کے لیے متعدد طرز عمل کا بار بار مظاہرہ کیا گیا ہے۔

بنیادی طور پر، ہم ایک صحت مند طرز زندگی تیار کر سکتے ہیں جو ہمارے جسم اور دماغ کو سہارا دیتا ہے اور ان عادات کو اپنے روزمرہ کے معمولات میں لاگو کر کے ایک خوشگوار اور زیادہ بھرپور زندگی کا نتیجہ بن سکتا ہے۔

مزید پڑھنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں