سندھ کا کوہ مری: گورکھ ہل اسٹیشن

سندھ کا کوہ مری: گورکھ ہل اسٹیشن

سندھ کا کوہ مری: گورکھ ہل اسٹیشن

رپورٹر: سید ثقلین رضا نقوی

سندھ کا کوہ مری گورکھ ہل اسٹیشن، ضلع دادو کی تحصیل جوہی میں سطح سمندر سے 6000 ہزار فٹ کی بلندی پر واقع ہے۔ یہ پہاڑی سلسلہ سندھ (دادو) اور بلوچستان (خضدار) کی صوبائی سرحدیں بناتا ہے۔


گورکھ ہل اسٹیشن 2400 ایکڑ کے رقبے پر پھیلا ہوا ہے۔ سندھ کا گورکھ ہل اسٹیشن خوبصورتی میں اپنی مثال آپ ہے۔ یہ ہل سٹیشن سیاحوں کی توجہ کا مرکز بھی ہے۔

بلند ترین حسین مقام سے پرلطف نظاروں کا مزہ ہی اپنا ہے۔ آلودگی سے پاک آب و ہوا اور خوبصورت قدرتی مناظرسیاحوں کا دل موہ لیتے ہیں۔ حسین نظارے نگاہوں کو مبہوت کر دیتے ہیں۔


تیز ٹھنڈی ٹھنڈی ہوائیں انسان کو سرشار کر دیتی ہیں۔ یہاں موسم گرما انتہائی خوشگوار ہوتا ہے۔ اس جگہ گورکھ ہل اسٹیشن پر گرمیوں میں درجہ حرارت 25 سینٹی گریڈ ہوتا ہے۔ جبکہ یہاں پر موسم سرما میں درجہ حرارت منفی تک گر جاتا ہے۔


جدید ترین سہولیات مہیا کرنے کے حکام نے دعوں کے باوجود بھی اس خوبصورت جگہ گورکھ ہل اسٹیشن کے بارے میں لگاتار حکومت کی مبینہ بے حسی اور لاپرواہی کی وجہ سے تھوڑی بہت سہولتیں بھی مہذ ایک خواب میں رہ گئی ہیں۔

واہی پانڈی سے گورکھ ہل جانے والی سڑک 54 کلو میٹر لمبی ہے لیکن بارشوں اور سیلاب کے باعث ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہے۔

خوبصورت تفریحی مقام سندھ ہل ڈولپمنٹ اتھارٹی اور صوبائی حکومت کی عدم توجہ کا شکار ہے۔ سیاحوں کو سہولیات کے فقدان کے باعث شدید مشکلات کا سامنا ہے۔


..مزید پڑھیں

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں