ای سی سی نے بھارت سے شوگر ، کاٹن اور سوت کی درآمد کی منظوری دے دی۔

ای سی سی نے بھارت سے شوگر ، کاٹن اور سوت کی درآمد کی منظوری دے دی۔

ای سی سی نے بھارت سے شوگر ، کاٹن اور سوت کی درآمد کی منظوری دے دی۔

رپورٹر: محمد اسامہ اسلم

اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) نے بدھ کے روز بھارت سے چینی ، کاٹن اور سوت کی درآمد کی منظوری دی۔

اجلاس میں گندم کی مالیت کی قیمت 1،800 روپے فی منڈ طے کرنے کی بھی منظوری دی گئی۔ کمیٹی نے متعدد اضافی گرانٹس کی بھی منظوری دی۔

وزیر خزانہ حماد اظہر نے کہا کہ اسٹیٹ بینک آف پاکستان کو رہن رکھنے کا تاثر۔ انہوں نے مزید کہا ، “آج ہماری کرنسی مضبوط ہو رہی ہے۔ ہم اس کی حمایت کے لئے ڈالر خرچ کر رہے ہیں۔”

انہوں نے کہا کہ بھارت سے 500،000 میٹرک ٹن چینی کی درآمد کی اجازت دی گئی ہے۔ انہوں نے مزید کہا ، “کاٹن سوت 30 جون 2021 سے بھارت سے درآمد کیا جائے گا۔”

وفاقی وزیر نے کہا کہ بھارت سے چینی کی درآمد سے پاکستان کی ضرورت پوری ہوگی۔ انہوں نے کہا ، “ہندوستان کے ساتھ تجارتی تعلقات بحال ہو رہے ہیں۔ ہم پارلیمنٹ میں اسٹیٹ بینک پر بل لگانے کے بعد ہر تجویز کو قبول کریں گے۔”

انہوں نے کہا کہ مہنگائی پر قابو پانا حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ حماد اظہر نے کہا کہ یوٹیلیٹی اسٹورز پر عوام کو مزید ریلیف فراہم کیا جائے گا۔

حریم شاہ نے مفتی قوی کو ‘بے ہودہ’ گفتگو کرنے پر تھپڑ مار دیا۔

امریکی صدر جوبائیڈن نے ٹرمپ کے امیگریشن کے احکامات کو کالعدم قرار دے دیا۔

مدینہ پاک کو ڈبلیو ایچ او کی جانب سے دنیا کا سب سے صحت مند شہر قرار دے دیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں