ہندوستان کے پہلے وزیر اعظم جواہر لعل نہرو کے مجسمے کو ہندوتوا گروپ نے توڑ دیا (ویڈیو)

ہندوستان کے پہلے وزیر اعظم جواہر لعل نہرو کے مجسمے کو ہندوتوا گروپ نے توڑ دیا (ویڈیو)

ہندوستان کے پہلے وزیر اعظم جواہر لعل نہرو کے مجسمے کو ہندوتوا گروپ نے توڑ دیا (ویڈیو)

نئی دہلی – دائیں بازو کے ہندو انتہا پسندوں نے زعفرانی لباس پہنے دھواری چوک میں سابق بھارتی وزیر اعظم جواہر لعل نہرو کے مجسمے کو توڑ دیا تھا۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک ویڈیو میں، وسطی بھارتی ریاست مدھیہ پردیش کے شہر بھوپال میں کئی حملہ آوروں کو لاٹھیوں اور پتھروں سے مجسمے کو توڑتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔

پرتشدد ہجوم کے درمیان، ایک شخص کو ہتھوڑے کا استعمال کرتے ہوئے مجسمے کو توڑتے ہوئے دیکھا جا سکتا ہے۔ دائیں بازو کے گروپوں کے ارکان نے بھگوا پرچم لہرائے اور مقامی انتظامیہ کے خلاف نعرے لگائے۔

اس واقعے کے بعد ہندو اکثریتی ملک کے سیکولر رہنما جواہر لعل نہرو کے مجسمے کو نقصان پہنچانے کے الزام میں کم از کم چھ افراد کو گرفتار کیا گیا تھا۔

مقامی پولیس نے بھارتی پبلیکیشنز کو بتایا کہ نامعلوم حملہ آوروں کے خلاف نہرو کے مجسمے کو نقصان پہنچانے اور سماجی خلفشار پیدا کرنے کا مقدمہ درج کیا گیا تھا۔

کانگریس کے سربراہ سمیت متعدد ہندوستانی رہنماؤں نے حکام سے معاملے کی تحقیقات اور شرپسندوں کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا۔

مزید پڑھنے کے لیے یہاں پر کلک کریں

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں