کراچی کے علاقے کھارادر میں دھماکے سے ایک شخص جاں بحق، 11 زخمی

کراچی کے علاقے کھارادر میں دھماکے سے ایک شخص جاں بحق، 11 زخمی

کراچی کے علاقے کھارادر میں دھماکے سے ایک شخص جاں بحق، 11 زخمی

کراچی کے علاقے کھارادر میں مسجد کے قریب دھماکے میں کم از کم ایک خاتون جاں بحق اور گیارہ افراد زخمی ہوگئے۔

دھماکا سندھ کے دارالحکومت میں جناح روڈ پر ہوا۔ زور دار دھماکے میں پولیس کی ایک گاڑی مکمل طور پر تباہ ہو گئی جبکہ کئی دیگر کھڑی کاروں کو جزوی نقصان پہنچا۔

رپورٹس بتاتی ہیں کہ دھماکہ خیز مواد ایک موٹر سائیکل میں نصب کیا گیا تھا جسے ریموٹ کنٹرول ڈیوائس کے ذریعے متحرک کیا گیا۔

سوشل میڈیا پر گردش کرنے والے کلپس میں، موٹر سائیکلوں کو شعلوں میں دیکھا جا سکتا ہے جب لوگ آگ بجھانے کی کوشش کر رہے تھے۔

پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا اور بم ڈسپوزل اسکواڈ (بی ڈی ایس) نے دھماکے کی نوعیت جاننے کے لیے تحقیقات شروع کر دی ہیں۔

زخمیوں کو طبی مرکز منتقل کر دیا گیا اور زخمیوں میں سے 4 کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے۔

وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے دھماکے کا نوٹس لیتے ہوئے سندھ پولیس کے سربراہ کو واقعے کی تفصیلی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی ہے اور ساتھ ہی ضلعی انتظامیہ کو موقع پر پہنچ کر امدادی کام کرنے کا حکم دیا ہے۔

شاہ نے مزید طبی سہولیات کو تمام زخمیوں کو بہترین علاج فراہم کرنے کی ہدایت کی۔

کراچی کے ایڈمنسٹریٹر مرتضیٰ وہاب نے اس حوالے سے ایک ٹوئٹ شیئر کرتے ہوئے بتایا کہ زخمیوں کی تعداد 11 ہوگئی جب کہ 4 کی حالت تشویشناک ہے۔

ساحل سمندر کے شہر کے جنوب میں واقع ضلع کا پڑوس گنجان آباد ہے اور شہر کا ایک بہت زیادہ کاروباری مرکز ہے۔

حالیہ دہشت گردی کا واقعہ جمعرات کو بندرگاہی شہر کے صدر علاقے میں ہونے والے ایک دھماکے کے چند دن بعد پیش آیا جس میں ایک شخص ہلاک اور متعدد شہری زخمی ہوئے۔

مزید پڑھنے کے لیے یہاں پر کلک کریں

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں