علیم خان پر کرپشن کے الزامات سامنے آنے سے قبل بشریٰ بی بی کی قریبی دوست فرح جمیل دبئی روانہ

علیم خان پر کرپشن کے الزامات سامنے آنے سے قبل بشریٰ بی بی کی قریبی دوست فرح جمیل دبئی روانہ

علیم خان پر کرپشن کے الزامات سامنے آنے سے قبل بشریٰ بی بی کی قریبی دوست فرح جمیل دبئی روانہ

اسلام آباد – سابق صوبائی وزیر اور پی ٹی آئی کے ناراض رہنما عبدالعلیم خان نے پی ٹی آئی کی زیرقیادت حکومت پر تنقید کی، خاص طور پر ان کے سابق قریبی دوست عمران خان جنہوں نے پاکستان میں سیاسی بحران کے گہرے ہوتے ہی اختلاف کرنے والے اراکین کو ‘غدار’ قرار دیا۔

یہ پیش رفت ایک انتہائی اہم وقت پر ہوئی ہے کیونکہ بشریٰ بی بی کی قریبی دوست فرح جمیل قومی اسمبلی کی تحلیل کے بعد دبئی فرار ہو گئی تھیں۔

فرح، جو لاہور میں مقیم ہیں، مبینہ طور پر پیر کی صبح خلیجی ملک کا سفر کیا۔ ان کے شوہر احسن جمیل گجر بھی ملک سے باہر چلے گئے ہیں۔

رپورٹس بتاتی ہیں کہ ایف آئی اے نے اسے نہیں روکا کیونکہ کوئی روک تھام کا حکم نہیں تھا۔

وزیر اعظم عمران کی اہلیہ کے قریبی ساتھی نے توجہ حاصل کی کیونکہ اپوزیشن اور ناراض پی ٹی آئی ارکان نے ان پر کرپشن کے سنگین الزامات لگائے۔

علیم خان ان لوگوں میں شامل ہیں جنہوں نے متعدد معاملات پر وزیر اعظم اور ان کے ‘نئے دوستوں’ کو تنقید کا نشانہ بنایا، خاص طور پر عثمان بزدار کو پنجاب کا وزیر اعلیٰ برقرار رکھنے پر۔

انہوں نے الزام لگایا کہ سابق وزیراعلیٰ بزدار نے پنجاب میں تبادلوں اور تعیناتیوں کے لیے رشوت لی۔ انہوں نے کہا کہ فرح تمام بدعنوانی میں ملوث رہی۔

علیم نے فرح کے خلاف الزامات کی تحقیقات کا بھی مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس بات کی تحقیقات کی ضرورت ہے کہ کیا وزیراعظم عمران خان کی اہلیہ بھی اپنے قریبی دوست کو سپورٹ کررہی تھیں۔

یہ سوشل میڈیا پر اس وقت سے ٹرینڈ کر رہا ہے جب سے مسلم لیگ ن کی رہنما مریم نواز اور دیگر اپوزیشن رہنما ماضی میں عمران خان اور ان کے اردگرد موجود لوگوں پر ایسے ہی الزامات لگا چکے ہیں۔

پی ٹی آئی حکومت کے خلاف کرپشن کے الزامات کے علاوہ، علیم نے وزیر اعظم عمران کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اس نے بنی گالہ میں امریکی سفیر سے ملاقات کی۔ “کیا ہم غدار تھے؟” علیم نے پنجاب کی وزارت اعلیٰ کے لیے مسلم لیگ ن کے رہنما حمزہ شہباز کی حمایت کے اعلان کے چند دن بعد پوچھا۔

مزید پڑھیں

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں