پتوکی کی شادی میں پاپڑ بیچنے والے کو پیٹ پیٹ کر قتل کرنے والے 13 ملزمان گرفتار

پتوکی کی شادی میں پاپڑ بیچنے والے کو پیٹ پیٹ کر قتل کرنے والے 13 ملزمان گرفتار

لاہور – پتوکی میں ایک شادی میں پاپڑ بیچنے والے کے قتل کے الزام میں پولیس نے 13 ملزمان کو گرفتار کر لیا ہے۔

واقعے کی ایف آئی آر کے مطابق پتوکی میں شادی کی تقریب میں چاول کریکر فروش محمد اشرف کا مہمانوں سے جھگڑا ہوا اور اسے مارا پیٹا گیا اور شادی ہال کے اندر گھسیٹ کر لے گئے۔ اس کی جائے وقوعہ پر موت ہو گئی۔

یہ واقعہ اس وقت منظر عام پر آیا جب فوٹیج میں شادی کے مہمانوں کو تقریب میں کھانا کھاتے ہوئے دکھایا گیا جب اشرف کی لاش شادی ہال میں پڑی تھی۔ یہ فوٹیج سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی اور شادی کے مہمانوں کی بدتمیزی پر عوام میں غصہ پیدا ہوا۔

پتوکی کے ڈی ایس پی آصف حنیف کے مطابق 13 مشتبہ افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے اور ان سے پوچھ گچھ کی جا رہی ہے۔

پنجاب پولیس کے انسپکٹر جنرل راؤ سردار علی خان نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے قصور کے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر (ڈی پی او) صہیب اشرف کو ملزمان کی گرفتاری کی ہدایت کی۔

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے بھی واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے پولیس کو ملوث افراد کے خلاف کارروائی کی ہدایت کی۔

بعد ازاں پتوکی تھانے میں ایف آئی آر اشرف کے بہنوئی پرویز کی شکایت پر تعزیرات پاکستان کی دفعہ 147، 149 اور 302 کے تحت درج کی گئی۔

مزید پڑھنے کے لیے یہاں پر کلک کریں

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں