ڈہرکی۔ گزشتہ روز تاجر ستن کمار کو نامعلوم ملزمان کی جانب سےقتل کردیا گیا

.ڈہرکی۔ گزشتہ روز ہندو برادری کے تاجر ستن کمار. کو نامعلوم ملزمان کی جانب سے آتشی اسلحہ سے گولی مار کر اُس وقت قتل کردیا گیا جب وہ اپنی کاٹن فیکٹری کی افتتاہی تقریب میں شامل تھا .جبکہ تقریب کے مہمان خصوصی سائیں سادرام موجود تھے. ملزمان نے عوامی رش کا فائدہ اُٹھاتے ہوئے فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے اُدھر ہندوبرادری اور ورثاء نے ملزمان کی گرفتاری کے لئے تھانے کے اندردھرنا دے دیا جس میں ہندوبرادری کے افراد کے علاوہ. مسلم کمیونٹی نے بھی اس اندھوناک واقع کے خلاف بڑی تعداد میں اظہار یکجہتی کرتے ہوئے شرکت کی .

.اُدھر پولیس کی جانب سے ڈی آئی جی سکھر نے. ورثاء اور احتجاج میں شامل افراد کو ملزمان کوجلد گرفتار کرنے کی یقین دھانی کروانے پر ورثاء نے مقتول کی میت کو آخری رسومات کے لئے گھر لے گئے.اور دھرنا موٗخر کردیا جبکہ شہر میں مکمل دکانیں بند ہیں. ہندو برادری کے مکھی انیل کمار اور چوہدری عبدالرزاق کا کہنا ہے. ملزمان جلد گرفتار نہ کئے تو ہم احتجاج دائربڑھا دیں گے. جو ملزمان کی گرفتاری تک جاری رہے گا.جبکہ اس واقع سے شہر میں عدم تحفظ خوف کی فضا نمایا دکھائی دے رہی ہے۔حکومت کی اولین ترجیح یہ ہونی چاہیے کہ وہ عوام کے تحفظ.کو یقینی بنائے

مزید پڑھیں

100% LikesVS
0% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں