مری میں برفانی طوفان میں سیاحوں سے زائد کرایہ وصول کرنے پر 15 ہوٹل سیل

مری میں برفانی طوفان میں سیاحوں سے زائد کرایہ وصول کرنے پر 15 ہوٹل سیل

اسلام آباد – انتظامیہ نے پنجاب کے تفریحی شہر مری میں گزشتہ ہفتے۔ برفانی طوفان کے دوران سیاحوں سے زیادہ قیمت وصول کرنے پر ایک درجن سے۔ زائد ہوٹلوں کو سیل کر دیا ہے۔

اس پیشرفت کا اعلان ڈپٹی کمشنر راولپنڈی نے ٹوئٹر پر کیا۔

انہوں نے کہا کہ مری کے اسسٹنٹ کمشنر نے کلڈانہ روڈ، اپر جھیکا گلی روڈ، بینک روڈ۔ اور ابوظہبی روڈ پر واقع ہوٹلوں کو سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے اوور چارجنگ۔ اور دیگر جرائم پر برہمی کے بعد سیل کر دیا ہے۔

ہفتے کے روز کم از کم 23 افراد سردی اور دم گھٹنے سے ہلاک ہو گئے۔

پولیس نے بتایا کہ متاثرین میں سے کچھ اپنی کاروں میں جم کر موت کے منہ میں چلے گئے۔ جب کہ دیگر کی موت دم گھٹنے سے ہوئی جب کہ ان کی کاریں برف میں پھنس گئیں۔

مری میں پھنسے ہوئے سیاحوں کی متعدد ویڈیوز سوشل میڈیا پر گردش کر رہی ہیں جن میں سے کئی ہوٹل والوں کی جانب سے زائد کرایہ وصول کرنے کی شکایت کر رہے ہیں۔

دریں اثناء پولیس نے مری میں شدید برف باری کے باعث سیاحوں کو دھوکہ دینے والے شخص کو گرفتار کر لیا ہے۔

مزید پڑھیں

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں