خیبرپختونخوا نے ناردرن کو شکست دے کر قائداعظم ٹرافی جیت لی

خیبرپختونخوا نے ناردرن کو شکست دے کر قائداعظم ٹرافی جیت لی

کراچی – خیبرپختونخوا نے ایک بار پھر ایسا کیا ہے – نیشنل اسٹیڈیم، کراچی میں 2021-22 ایڈیشن کے پانچ روزہ، ڈے اینڈ نائٹ فائنل میں ناردرن کو 169 رنز سے شکست دے کر باوقار قائد اعظم ٹرافی کو برقرار رکھا۔ بدھ.

محمد ہریرہ نے ناردرن کو حاصل کیا، جس نے آخری دن 384 رنز کا ہدف دیا، اپنے یادگار تعاقب میں شاندار آغاز کیا۔ دائیں ہاتھ کے اس بلے باز نے تاریخ رقم کی جب اس نے اپنی اننگز کا ساتواں رن بنایا جب اس نے ٹورنامنٹ میں خیبر پختونخوا کے صاحبزادہ فرحان کے 935 رنز کی تعداد کو پیچھے چھوڑ دیا، اپنے پہلے فرسٹ کلاس سیزن میں بیٹنگ چارٹس میں سرفہرست رہنے کا منفرد ریکارڈ قائم کیا۔

تاہم، وہ لڑتے ہوئے اتر گئے کیونکہ وہ میچ کے آخری سیشن میں 18.4 اوورز کے ساتھ اپنی دوسری اننگز میں 214 رنز پر ڈھیر ہو گئے۔

0

حریرہ کو بعد میں ٹورنامنٹ کا بہترین بلے باز قرار دیا گیا۔ سیالکوٹ میں پیدا ہونے والے نے 49 گیندوں (چھ چوکوں) پر 57 رنز کی شاندار شاٹس کی سیریز کھیلی۔

ناردرن تیز رنز کی تلاش میں وکٹیں کھوتا رہا کیونکہ خیبر پختونخواہ کے باؤلرز نے جگہ بنائی۔

مبصر خان، جنہیں بعد میں ناردرن کے لیے آل راؤنڈ شراکت کے لیے ٹورنامنٹ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا، وہ آؤٹ ہونے والے آخری کھلاڑی تھے جب خیبر پختونخواہ کے کپتان افتخار احمد نے آف اسپنر ساجد خان کا کیچ لے کر خوشی کا اظہار کیا۔

پہلی اننگز میں چار وکٹیں لینے والے اسٹار گیند باز نے دوسری اننگز میں پانچ وکٹیں حاصل کرکے دوسری اننگز میں ناردرن بیٹنگ کی تباہی کی قیادت کی۔

افتخار جنہیں بعد میں فائنل میں ان کی آل راؤنڈ کوششوں پر میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا، نے اپنے آف اسپنرز کے ساتھ دو وکٹیں حاصل کیں جبکہ محمد وسیم جونیئر نے 38 رنز کے عوض دو وکٹیں حاصل کیں۔

اس سے قبل، 270 رنز کے برتری کے ساتھ اپنی دوسری اننگز کا دوبارہ آغاز کرتے ہوئے، خیبرپختونخوا نے نچلے آرڈر میں ریحان آفریدی کے 79 اور ساجد خان کے 39 رنز کی قابل قدر شراکت کی بدولت 383 رنز کی برتری حاصل کرنے میں کامیابی حاصل کی۔

1

رات بھر ناقابل شکست رہنے والے آفریدی آج 50 تک پہنچ گئے۔ وہ 110 گیندوں (آٹھ چوکے، ایک چھکا) پر 79 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ ساجد نے 48 گیندوں پر 39 رنز (دو چوکے، دو چھکے) میں لمبے ہینڈل کا مؤثر طریقے سے استعمال کیا۔

خیبرپختونخوا بالآخر 265 رنز پر ڈھیر ہوگئی، ناردرن کو کم از کم 64 اوورز میں 384 رنز کا ہدف ملا۔ بائیں ہاتھ کے اسپنر محمد نواز نے چار جبکہ موسیٰ خان نے بالترتیب 65 اور 71 رنز دے کر تین وکٹیں حاصل کیں۔

سٹار کھلاڑیوں نے سوشل میڈیا پر KPK کی مسلسل جیت پر تعریف کی۔

<blockquote class=”twitter-tweet”><p lang=”en” dir=”ltr”>Congratulations Khyber Pakhtunkhwa for winning the prestigious Quaid-e-Azam Trophy 2021-22. This is the result of sheer hard work and selfless efforts from everyone involved. Huge shout out to support staff, coaches and every single team member. <a href=”https://twitter.com/hashtag/NORvKP?src=hash&amp;ref_src=twsrc%5Etfw”>#NORvKP</a> <a href=”https://twitter.com/hashtag/QeAT?src=hash&amp;ref_src=twsrc%5Etfw”>#QeAT</a> 🏆 <a href=”https://t.co/5U1HVWyvkc”>pic.twitter.com/5U1HVWyvkc</a></p>&mdash; Shaheen Shah Afridi (@iShaheenAfridi) <a href=”https://twitter.com/iShaheenAfridi/status/1476230510959595523?ref_src=twsrc%5Etfw”>December 29, 2021</a></blockquote> <script async src=”https://platform.twitter.com/widgets.js” charset=”utf-8″></script>

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں