پیٹرول کی قیمتیں دوبارہ بڑھ سکتی ہیں، ترین نے خبردار کیا۔

آئی ایم ایف نے قرض کی سہولت بحال کرنے کے لیے پانچ اہم پیشگی اقدامات کا مطالبہ کیا

اسلام آباد — وزیر اعظم کے مشیر برائے خزانہ اور محصول شوکت ترین نے یہ اشارہ مسترد کر دیا ہے۔ کہ امریکی ڈالر کے مقابلے پاکستانی روپے کی قدر میں مسلسل کمی کے باعث پیٹرول مزید مہنگا ہو سکتا ہے۔

کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ترین نے خبردار کیا کہ پیٹرول کی قیمتیں بڑھ سکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اگر عالمی قیمتیں بڑھیں تو پاکستان میں پیٹرول کی قیمتیں مزید بڑھ سکتی ہیں۔

ترین نے کہا کہ روپے کی قدر میں ’سٹا مافیا‘ ملوث ہے۔ ڈالر افغانستان سمگل کیا جا رہا ہے اور حکومت مافیا کے گرد گھیرا تنگ کرنے جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا۔ کہ حکومت قومی معیشت کو پائیدار بنیادوں پر مستحکم کرنے کے لیے طویل المدتی حکمت عملی پر کام کر رہی ہے۔

ترین نے کہا۔ کہ وزیر اعظم عمران خان نے COVID-19 کے دوران لوگوں کے ذریعہ معاش اور معیشت کے تحفظ کے لئے متوازن فیصلے کئے۔ مشیر نے کہا۔ کہ حکومت تمام شعبوں میں ترقی کو یقینی بنانے کے لیے تعمیرات، زراعت اور صنعت پر پوری توجہ مرکوز کر رہی ہے۔

انہوں نے کہا۔ کہ گزشتہ سال کے دوران زرعی پیداوار میں نمایاں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔ اور ہم اپنی آمدنی کو نو سے گیارہ فیصد تک بڑھانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

شوکت ترین نے کہا۔ کہ گزشتہ سال کے دوران انفارمیشن ٹیکنالوجی کے شعبے کی برآمدات میں 47 فیصد اضافہ ہوا اور دیگر شعبے بھی ترقی کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ تعمیراتی شعبے کے فروغ سے روزگار کے مواقع پیدا ہوئے ہیں۔

بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مشیر خزانہ نے کہا کہ آئی ایم ایف کے ساتھ تمام معاملات جلد طے پا جائیں گے۔

مزید پڑھیں

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں